| | | |  
دعاء حزب البحر
بِسْمِ اللّٰہِ الرَّحْمٰنِ الرَّحِیْمِ
شروع کرتا ہوں اللہ کے نام سے کہ بڑا مہربان رحم کرنیوالا ہے
(۱)یَاعَلْیّ ُ یَا عَظِیْمُ یَا حَلِیْمُ یَا عَلِیْمُ
اے بلند مرتبہ اے بزرگ اے بردبار اے دانائے اسرار
اَنْتَ رَبِّی وَعِلْمُکَ حَسْبِیْ فَنِعْمَ الرَّبُّ
توہی میرا پالنے والا ہے اور تیرا علم مجھے بس ہے پس کیا اچھا رب ہے
رَبِّیْ وَنِعْمَ الْحَسْبُ حَسْبِیْ تَنْصُرُمَنْ تَشَآءُ
میرا رب اور اچھا کفایت کرنیوالا ہے میرا کفایت کرنیوالا تو مدد کرتا ہے
وَاَنْتَ الْعَزِیْزُ الرَّحِیْمُ (۲) نَسْاَلُکَ الْعِصْمَةَ
جسکی چاہتا ہے اور تو غالب ہے مہربان ہے ہم مانگتے ہیں تجھ سے حفاظت
فِی الْحَرَکَاتِ وَالسَّکَنَاتِ وَالْکَلِمَاتِ وَالْاِرَادَاتِ
چالوں میں اور ٹھہرنے میں اور بولنے میں اور خواہشوں
وَالْخَطَرَاتِ مِنَ الظُّنُوْنِ وَالشُّکُوْکِ وَالْاَوٴھَامِ
اور خطروں میں گمانوں اور شکوں سے اور ایسے وہموں سے
السَّاتِرَةِ لِلْقُلُوْبِ عَنْ مُّطَالَعَةِ الْغُیُوْبِ
کہ چھپانے والے ہیں دلوں کے دیکھنے سے پوشیدہ چیزوں کے پس تحقیق
(۳) فَقَدِ ابْتُلِیَ الْمُوٴمِنُوْنَ وَزُلْزِلُوْزِلْزََالاً شَدِیْدًاo
آزمائے گئے ایمان والے اور ہلائے گئے ہیں سخت ہلانا۔
وَاِذْ یَقُوْلُ الْمُنَافِقُوْنَ وَالَّذِیْنَ فِیْ قُلُوْبِہِمْ مَرَضٌ
اور جب کہتے ہیں منافقین اور جن کے دلوں میں بیماری ہے
مَّاوَعَدَ نَا اللّٰہُ وَرَسُوْلُہ’ اِلاَّ غُرُوْرًا (۴) فَثَبِّتْنآ وَانْصُرْنَا
نہیں وعدہ دیا ہم کو اللہ اور اسکے رسول نے مگر فریب پس ثابت رکھ
وَسَخِّرْلَنَا ھٰذَا الْبَحْرَ کَمَا سَخَّرْتَ الْبَحْرَلِمُوْسٰی عَلَیْہِ
اور ہماری مدد کر اور ہمارے تابع کردے اس دریا کو جیسا تابعدار کیا تھا
السَّلاَمْ وَسَخَّرْتَ النَّارَ لِاِ بْرَاھِیْمَ عَلَیْہِ السَّلاَمُ
تونے دریا کو حضرت موسیٰ کیلئے اور تابع کیا تونے آگ کو حضرت ابراہیم
وَسَخَّرْتَ الْجِبَالَ وَالْحَدِیْدَ لِدَا وُدَعَلَیْہِ السَّلاَمُ
کیلئے سلام ہو ان پر اور تابع کیا تھا تونے پہاڑوں اور لوہے کو حضرت داوٴد  کیلئے سلام ہو ان پر
وَسَخَّرْتَ الرِّیْحَ وَالشَّیَاطِیْنَ وَالْجِنَّ لِسُلَیْمَانَ
اور تابعدار کیا تھا تونے ہوا کو اور شیطانوں یعنی دیووں اور جنکو حضرت سلیمان کیلئے
عَلَیْہِ السَّلاَمْ وَسَخِّرْلَنَا کُلَّ بَحْرٍ ھُوَلَکَ فِی الْا َرْضِ
سلام ہو ان پر اور ہمارے تابع کردے ہر دریا کو وہ تیرا ہے زمین
وَالسَّمَآءِ وَالْمُلْکِ وَالْمَلَکُوْتِ وَبَحْرَ الدُّنْیَا
اور آسمانوں میںاور ملک اور ملکوت میں اور دنیا کے
وَ بَحْرَ الْاٰ خِرَ ةِ وَسَخِّرْلَنَا کُلَّ شَیْءٍ یَا مَنْم بِیَدِہ
ہر دریا کو اور دریائے آخرت کو اور ہمارے تابع کردے ہر چیز کو اے وہ کہ اس کے ہاتھ
مَلْکُوْتُ کُلِّ شَیْءٍ (۵) کٓہٰیٰعٓصٓ انْصُرْنَا فَاِنَّکَ
میں بادشاہی ہر چیز کی ہماری مدد کر تو بیشک بہترین مدد
خَیْرْالنَّاصِرِیْنَ o وَافْتَحْ لَنَا فَاِنَّکَ خَیْرُ الْفَاتِحِیْنَo
کرنیوالا ہے اور کھولدے ہمارے لئے مکار ہائے بستہ بیشک تو سب کھولنے والوں سے بہتر ہے
وَاغْفِرْلَنَا فَاِنَّکَ خَیْرُ الْغَافِرِیْنo وَارْحَمْنَا
اور ہم کو بخشدے بیشک تو سب بخشنے والوں سے بہتر ہے۔ اور مہربانی کر ہم پر
فَاِنَّکَ خَیْرُ الرَّاحِمِیْنَ o وَارْزُقْنَا فَاِنَّکَ
بیشک تو کل رحم کرنیوالوں سے بہتر ہے اور ہم کو روزی دے بیشک تو بہترین
خَیْرُ الرَّازِقِیْنَo وَاحْفِظْنَا فَاِنَّکَ
روزی دینے والا ہے اور ہماری حفاظت کر بیشک تو بہترین
خَیْرُ الْحَافِظِیْنَo وَاھْدِنَا وَنَجِّنَا
حفاظت کرنیوالا ہے اور اپنی راہ دکھا ہم کو اور
مِنَ الْقَوْمِ الظَّالِمِیْنَo وَھَبْ لَنَا مِنْ لَّدْنْکَ
ظالموں سے اور دے ہم کو اپنے پاس سے ہوائے
رِیْحًا طَیِّبَةً کَمَا ھِیَ فِی عِلْمِکَ وَانْشُرْھَا عَلَیْنَا
خوش جیسی کہ وہ تیرے علم میں ہے۔ اور پھیلادے اس کو ہم پر
مِنْ خَزَائِنِ رَحْمَتِکَ وَاحْمِلْنَا بِہَا حَمْلَ الْکَرَامَةِ
اپنی رحمت کے خزانوں سے اور اٹھا ہم کو بسبب اسکے بزرگی کی اٹھان
مَعَ السَّلاَمَةِ وَالْعَافِیَةِ فِی الدِّیْنِ وَالدُّنْیَا وَالْاٰخِرَةِ
سلامتی اور آرام کے سا تھ دین اور دنیا میں اور آخرت میں
اِنَّکَ عَلٰی کُلِّ شَیٍءٍ قَدِیْرo
بیشک تو ہر چیز پر قادر ہے
(۶) اَللّٰہُمَّ یَسِّرْلَنَا اُمُوْرَنَامَعَ الرَّاحَةِ
یا اللہ آسان کردے ہمارے لئے دلوں
لِقُلُوْبِنَا وَاَبْدَانِنَا وَالسَّلاَمَةِ وَالْعَافِیَةِ
کو راحت کے ساتھ ہمارے دلوں اور بدنوں کے لئے اور سلامتی اور آرام
فِی دِیْنِنَا وَدُنْیٰنَا وَاطْمِسْ عَلٰی وُجُوْہِ اَعْدَ ٓائِنَا
کے سا تھ دین اور دنیا میں اور ہمارے دشمنوں کے چہروں کو
وَامْسَخْہُمْ عَلیٰ مَکَانَتِہِمْ فَلاَ یَسْتَطِیْعُوْنَ
کو مٹادے اور بدل دے ان کو ان کی جگہ پر پھر نہ طاقت پاسکیں
الْمُضِیَّ وَلاَ الْمَجِئَ اِلَیْنَا وَلَوْنَشَآءُ لَطَمَسْنَا
جانے کی اور نہ آنے کی ہماری طرف اور اگر ہم چاہیں تو دور کردیں
عَلیٰ اَعْیُنِہِمْ فَاسْتَبَقُوْا لِصِّرَاطَ فَاَنّٰی یُبْصِرُوْنَ․
نظر ان کی آنکھوں کی پھیردوڑیں رستے کو تو کہاں سے دیکھیں
وَلَوْنَشَاءُ لَمَسَخْنَاھُمْ عَلٰی مَکَانَتِہِمْ فَمَا
اگر ہم چاہیں تو بدل ڈالیں انکو ان کی جگہ پر پس نہ
اسْتَطَاعُوْا مُضِیّاً وَلاَ یَرْجُعْونَo (۷)یٰسٓ وَالْقُرْاٰنِ
طاقت پائیں گے آگے جانے کی اور نہ پھر آنے کی قسم ہے قرآن حکمت
الْحَکِیْمِo اِنَّکَ لَمِنَ الْمُرْسَلِیْنَo عَلٰی صِرَاطٍ
والے کی بیشک تو رسولوں سے ہے سیدھی
مُّسْتَقِمْ تَنْزِیْلَ الْعَزِیْزِ الرَّحِیْمِo
راہ پر اتارا ہوا زبردست رحم والے کا
لِتُنْزِرَقَوْمًا مَّآ اُنْذِ رَ اٰ بَآ ئُو ھُمْ فَہُمْ غَافِلُوْنَo
تاکہ تو ڈرادے ان لوگوں کو جن کے باپ دادا نہ ڈرائے گئے سو وہ غافل ہیں
لَقَدْ حَقَّ الْقَوْلُ عَلٰی اَکْثَرَھِمْ فَہُمْ لَا یُوءْ مِنُوْنَo
البتہ تحقیق ثابت ہوگئی بات بہتوں پر ان کے پھر وہ ایمان نہیں لاتے
اِنَّا جَعَلْنَا فِیْ اَعْنَاقِہِمْ اَغْلاَ لاً فَہِی اِلَی الْاَذْقَانِ
بیشک ہم نے ڈالے ہیں ان کی گردنوں میں طوق سو وہ تھوڑیوں تک ہیں
فَہُمْ مُقْمَحُوْنَo وَجَعَلْنَا مِنْ م بَیْنِ اَیْدِیْہِمْ
پھر وہ سر اونچا کئے ہوئے ہیں اور ہم نے بنائی ان کے سامنے
سُدًّا وَّمِنْ خَلْفِہِمْ سُدًّا فَاَغْشَیْنَاھُمْ فَہُمْ
دیوار اور پیچھے ان کے دیوار پھر ڈھانکا ہم نے ان کو سو وہ نہیں
لَا یُبْصِرُوْنَo شَاھَتِ الْوُجُوْہُ وَعَنَتِ الْوُجُوْہُ
دیکھتے بد رو ہوئے منہ اور رنج آلود ہوئے منہ واسطے زندہ کے
لِلْحَیِّ الْقَیُّومْo وَقَدْ خَابَ مَنْ حَمَلَ ظُلْماًo
اور سب کے قائم کرنیوالے کے اور البتہ اس نے گھاٹا اٹھایا جس نے اٹھالیا کو
(۸)طٰسٓ طٰسٓمٓ حٰمٓعٓسٓقٓ مَرَجَ الْبَحْرَیْنِ یَلْتَقِیَانِ
جاری کئے دو دریا کہ ملے ہوئے چلتے ہیں
بَیْنَہُمَا بَرْزَخٌ لاَیَبْغَیِانِ (۹) حٰمٓ حُمَّ الْاَمْرُوَجَاءَ
دونوں کے درمیان ایک پردہ ہے کہ زیاد تی نہیں کرتی گرم ہوا کام اور
النَّصْرُ فَعَلَیْنَا لاَیُنْصَرُوْنَ(۱۰)حٰمٓ تَنْزِیْلُ الْکِتَابِ
آگئی مدد سو ہم پر وہ مدد نہ پائیں گے اتارنا کتاب کا اللہ سے
مِنَ اللهِ الْعَزِیْزِ الْعَلِیْمِ لا غَافِرِ الذَّنْبِ
ہے کہ زبردست ہے علم والا گناہ بخشنے والا
وَقَابِلِ التَّوْبِ شَدِیْدِ الْعِقَابِ ذِی الطَّوْلِط لآاِلٰہَ
اور توبہ قبول کرنیوالا سخت عذاب کرنیوالا احسان و بزرگی والا کوئی معبود نہیں
اِلاَّھُوَط اِلَیْہِ الْمَصِیْرُo﴿۱۱﴾ بِسْمِ اللهِ بَابُنَا تَبَارَکَ
سوا اسکے اسی کی طرف پھرجانا ہے بسم اللہ ہمارا دروازہ ہے۔ تبارک ہماری
حِیْطَانُنَا یٰسٓ سَقْفُنَا کٓہٰیٰعٓصٓ کِفَایَتْنَا
دیواریں یٰس ہماری چھت ہے کٓہٰیٰعٓصٓ ہمارے لئے کفایت ہے
حٰمٓعٓسٓقٓ حِمَایَتْنَا ﴿۱۲﴾فَسَیَکْفِیْکَہُمُ اللّٰہُ ط وَھُوَ
حٰمٓعٓسٓقٓ ہمارے لئے حمایت ہے پس قریب ہے کہ کفایت کریگا تجھ کو ان سے
السَّمِیْعُ الْعَلِیْمُ ﴿۱۳﴾ سِتْرُالْعَرْشِ مَسْبُوْلٌ عَلَیْنَا
اللہ اور وہ سننے والا جاننے والا ہے پر وہ عرش کا لٹکایا گیا ہم پر اور
وَعَیْنُ اللهِ نَاظَرَ ةٌ اِلَیْنَا بِحَوْلِ اللّٰہِ لاَیَقْدِرُ عَلَیْنَا
آنکھ اللہ کی ہماری طرف دیکھنے والی ہے اللہ کی توانائی کے ساتھ نہیں
وَالله ُ مِنْ وَّرَآئِہمْ مُحِیْطٌo بَلْ ھُوَقُرْآنٌ مَجِیْدٌ
قدرت پاسکتا ہم پر مخالف اور اللہ ان کے گرد احاطہ کرنیوالا ہے بلکہ وہ قرآن بزرگ لوح
فِیْ لَوْحٍٍ مَّحْفُوْظَ﴿۱۴﴾فَا الله ُ خَیْرٌ حَافِظًاقف وَھُوَ
میں نگاہ رکھا گیا ہے سو اللہ بہتر ہے نگاہ رکھنے والا اور وہ بڑا
اَرْ حَمُ الرَّاحِمِیْنَ (۱۵) اِنَّ وَلیِّیِیَ اللّٰہُ الَّذِیَ نَزَّلَ
رحم کرنے والوں کا ہے تحقیق کہ میرا کارساز اللہ تعالیٰ ہے جس نے
الْکِتَابَ وَہُوَ یَتَوَلَّی الصّٰلِحِیْنَ (۱۶) حَسْبِیَ اللّٰہُ
اتاری کتاب اور وہ کارسازی کرتا ہے نیکو کاروں کی مجھے اللہ کافی ہے
لآ اِلٰہَ اِلاَّ ھُوَ، عَلَیْہِ تَوَکَّلْتُ وَھُوَ رَبُّ الْعَرْشِ
کوئی معبود نہیں سوائے اسکے اسی پر میں نے بھروسہ کیا اور وہ پروردگار ہے بڑے تخت کا
الْعَظِیْم﴿۱۷﴾ بِسْمِ اللّٰہِ الَّذِی لَایَضُرُّمَعَ اِسْمِہ شَیْئٌ
اللہ کے نام کے ساتھ شروع کرتا ہوں کہ نہیں ضرر پہنچا سکتی ہے
فِیْ الاَرْضِ وَلاَ فِی السَّمَآءِ وَھُوَ السَّمِیْعُ الْعَلِیْمُ․
اسکے نام کے ساتھ کوئی چیز زمین میں کی اور نہ آسمان میں کی اور وہ سننے والا جاننے والا ہے
﴿۱۸﴾ وَلاَحَوْلَ وَلاَ قُوَّةَ اِلاَّ بِاللهِ الْعَلِیِّ الْعَظِیْم
اور نہ پھرنا ہے گناہ سے اور نہ قوت طاعت کی مگر اللہ کی مدد کیساتھ کہ بلند شان بزرگ قدر ہے
سُبْحَانَ رَبِّکَ رَبِّ الْعِزَّةِ عَمَّا یَصِفُوْنَ وَسَلاَمٌ
پاک ہے تیرا رب پروردگار عزت کا اس سے جیسی وہ صفت کرتے ہیں اور
عَلَی الْمُرْسَلِیْنَ وَالْحَمْدُلِلّٰہِ رَبِّ الْعٰلَمِیْنَ․
سلام رسولوں پر اور تعریف اللہ کیلئے ہے کہ تمام عالموں کا پالنے والا ہے
وَصَلَّی اللّٰہُ تَعَالٰی عَلٰی خَیْرِ خَلْقِہ سَیّدِنَا وَ
اور درود بھیج اللہ برتر اپنے بہترین خلق پر ہمارے سردار اور آقا محمد صلی اللہ
مَوْلینَا مُحَمَّدٍ وَّعَلٰی اٰلِہ وَاَصْحَابِہ اَجْمَعِیْنَ
علیہ وسلم اور ان کی آل اور اصحاب سب پر اپنی رحمت سے
بِرَحْمَتِکَ یَا اَرْحَمَ الرَّحِمِیْنَ ․
اےبڑی مہربانی کرنیوالے سب مہربانی کرنیوالوں سے